دس گھنٹوں کی جنگ کے بعد بلوچ مزاحمتکاروں نے اپنی آخری گولی اپنے جسم میں اتار دی

کوئٹہ (ریپبلکن نیوز) گوادر میں پرل کانٹینینٹل ہوٹل پر حملہ دس گھنٹوں کی طویل جنگ کے بعد ختم ہوگیا، جنگ کا خاتمہ بلوچ مزاحمتکاروں نے اپنی آخری سے خود کو شہید کر کے کیا۔

تفصیلات کے مطابق گوادر کے فائیو اسٹار ہوٹل پرل کانٹینینٹل میں گزشتہ دس گھنٹوں سے بلوچ مزاحمتکاروں اور ریاستی فورسز کے درمیان جھڑپیں جاری تھیں۔ بلوچ مزاحمتکاروں نے پی سی ہوٹل پر قبضہ کرلیا تھا جس کے باعث ریاستی فورسز ہوٹل میں داخل ہونے میں مکمل ناکامی کا شکار تھے۔

مزاحمتکاروں نے ہوٹل سے گوادر پورٹ کی جانب بھی متعدد راکٹ کے گولے فائیر کیئے ہیں، جبکہ ہوٹل کے اندر موجود چینی باشندے جن میں سرمایہ کار بھی شامل تھے مارے جاچکے ہیں۔ اس دوران فورسز کے بھی متعدد اہلکار ہلاک ہوئے ہیں۔

دس گھنٹوں کی طویل جنگ کے بعد بلوچ مزاحمتکاروں کی گولیاں ختم ہوگئی جس کے بعد انہوں نے اپنی آخری گولی اپنے جسم میں اتار دی۔

مزید خبریں اسی بارے میں

Back to top button