وی سی جامعہ بلوچستان کو برطرف کیا جائے، میرسرفراز ڈومکی

کوئٹہ (ریپبلکن نیوز)بلوچستان عوامی پارٹی کے رہنماء سابق صوبائی وزیر سردارسرفراز ڈومکی نے مطالبہ کیا ہے کہ بلوچستان یونیورسٹی کے واقعہ میں ملوث افراد کو فوری طورپر معطل کرکے ان کے خلاف سخت کارروائی عمل میں لائی جائے،

انھونے کہا ہے کہ بلوچستان یونیورسٹی کے وائس چانسلر کی ناک کے نیچے سب کچھ ہوتا رہا لیکن وہ سب اچھا کا راگ الاپتے رہتے ہیں، وائس چانسلر کو فوری طورپر برطرف کیا جائے، طلباء کے وفد سے بات چیت کرتے ہوئے

انہوں نے کہا کہ ہمارے صوبہ کی اپنی روایات ہیں اور بچیوں کا احترام ہم پر لازم ہے جس پر ہمارے آبائو اجداد نے اور ہم نے کبھی کوئی سمجھوتہ نہیں کیا، بچیوں کو ہراساں کرنے کا اتنا بڑا واقعہ رونما ہو چکا ہے لیکن یونیورسٹی انتظامیہ کی جانب سے کوئی کارروائی نظر نہیں آرہی صرف لوگوں کو بے وقوف بنانے کے لئے تسلیاں دی جارہی ہیں جس کی میں پرزور الفاظ میں مذمت کرتا ہوں،انہوں نے گورنر سے مطالبہ کیا کہ وہ وائس چانسلر کو فوری طورپر برطرف کرکے بچیوں کو ہراساں کرنے والے واقعہ میں ملوث افراد کو نشان عبرت بنائیں ۔

مزید خبریں اسی بارے میں

Back to top button
error: پوسٹ کو شیئر کریں