چیرمین نیب کا سزائے موت پانے والا بھائی والدین کے قتل کے مقدمے میں بری

نیوز ڈیسک (ریپبلن نیوز) لاہور ہائیکورٹ نے چیرمین نیب جسٹس ریٹائرڈ جاوید اقبال کے والدین کے قتل میں سزائے موت پانے والے تین ملزمان بری کردیے۔

لاہور ہائیکورٹ میں چیرمین نیب جسٹس ریٹائرڈ جاوید اقبال کے والدین کے قتل کیس کی سماعت ہوئی۔ عدالت نے تینوں ملزمان کو ناکافی شواہد کی بنا پر بری کیا۔

بری ہونے والوں میں چیرمین نیب جاوید اقبال کے سوتیلے بھائی نوید اقبال سمیت دیگر دو ملزمان عباس اور امین بھی شامل ہیں۔ ملزمان پر 2011 میں لین دین کے تنازع پر والدین کو قتل کرنے کا الزام تھا۔

جاوید اقبال کے والد سابق ڈی آئی جی پنجاب پولیس عبدالمجید اور والدہ زرینہ بی بی کو 2011ءمیں قتل کردیا گیا تھا۔ دولت کی لالچ میں والدین کے قتل کے الزام میں جاوید اقبال کے سوتیلے بھائی نوید اقبال اور اس کے تین ساتھیوں عباس شاکر اور امین علی کو گرفتار کیا گیا۔

ماتحت عدالت نے تینوں ملزمان کو دو، دو بارسزائے موت اور ساڑھے پانچ لاکھ روپے فی کس جرمانے کی سزا سنائی تھی۔

مزید خبریں اسی بارے میں

Back to top button
error: پوسٹ کو شیئر کریں