ڈیرہ بگٹی میں خونریز جھڑپیں، آٹھ اہلکاروں سمیت دو مخبر ہلاک، بلوچ مزاحمتکار شہید

ڈیرہ بگٹی (ریپبلکن نیوز)ضلع ڈیرہ بگٹی میں آج صبح سے بلوچ مزاحمتکاروں اور پاکستانی فوج کے درمیان خونی تصادم جاری ہے، جس میں اب تک آٹھ اہلکاروں سمیت دو مخبر ہلاک ہوچکے ہیں۔

ریپبلکن نیوز کو موصول ہونے والی اطلاعات کے مطابق ڈیرہ بگٹی کے علاقے مزارانی میں پاکستان فوج اور مسلح مزاحمتکاروں کے درمیان خونریز جھڑپیں جاری ہیں۔

علاقائی زرائع نے ریپبلکن نیوز کو بتایا کہ گئی گھنٹوں سے جاری جھڑپوں کے دوران پاکستان فوج کے آٹھ اہلکاروں سمیت دو مقامی مخبر بھی ہلاک ہوگئے ہیں، ہلاک مخبروں میں سے ایک کی شناخت فیضو شمبانی کے نام سے ہوئی ہے۔ جبکہ شام ڈھلنے کے وقت تین ہیلی کاپٹر بھی فورسز کی مدد کیلئے جائے وقوعہ پر پہنچ گئے ہیں۔

دوسری جانب بلوچ مزاحمتکاروں کے شہادتوں کی بھی غیر مصدقہ اطلاعات موصول ہوئیں ہیں، تاہم ابھی تک علاقے میں سرگرم بی آر اے یا بی ایل ٹی کی جانب سے کوئی باضابطہ بیان جاری نہیں کیا گیا۔

مزید خبریں اسی بارے میں

Back to top button
error: پوسٹ کو شیئر کریں